p24

ہیوسٹن میں فائرنگ کرنے والا بھارتی نژاد امریکی وکیل نکلا

نیویارک ( پاکستان نیوز ) بھارتی نژاد امریکی وکیل نے ہیوسٹن میں فائرنگ کر کے 9 افراد کو زخمی کر دیا جبکہ پولیس کی جوابی کارروائی میں فائرنگ کرنیوالا بھارتی ہلاک ہو گیا۔ حکام کے مطابق واقعہ پیر کو پیش آیا۔ ٹائمز آف انڈیا کے مطابق ناتھن ڈیسائی نامی وکیل نے فائرنگ ک وقت فوجی طرز کا لباس پہنا ہوا تھا اور وہ 20 منٹ تک سڑک پر سے گزرنے والی کاروں پر فائرنگ کرتا رہا۔ پولیس نے کہا ہے کہ فی الحال یہ معلوم نہیں ہو سکا کہ وہ مختلف لوگوں پر کیوں فائرنگ کرتا رہا۔ ابتدائی خبروں میں ناتھن ڈیسائی کو یورپی لکھا گیا تھا تاہم اس کے والد پرکاش ڈیسائی نے اسے شناخت کر لیا۔ پولیس چیف مارٹھا مونتالوو کا کہنا تھا کہ ناتھن ڈیسائی کے اپنی لاءفرم سے اختلافات چل رہے تھے۔ اس کے 80 سالہ باپ پرکاش ڈیسائی کا کہنا تھا کہ وہ اپنی لاءپریکٹس نہ چلنے پر پریشان تھا، اس نے اپنے موکلوں سے بچنے کیلئے متعدد بندوقیں خریدی تھیں۔ پرکاش ڈیسائی ریٹائرڈ جیالوجسٹ ہیں۔ پولیس کو ڈیسائی کے فلیٹ سے متعدد فوجی اشیاءملیں جن کا تعلق خانہ جنگی کے دور سے تھا۔ پولیس کو تھامپسن سب مشین گن، ایک 0.45 طرز کی ہینڈگن بھی ملی، اس نے یہی گن پولیس کیخلاف استعمال کی۔ پولیس نے روبوٹ کے ذریعے اس کی کار کی تلاشی لی۔




Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *