اہم ترین خبریں
لاس اینجلس: ہالی ووڈ فلم ’’لالہ لینڈ‘‘ سے دنیا بھر میں مقبولیت حاصل کرنے والی خوبرو اداکارہ ایما اسٹون رواں سال سب سےزیادہ کمائی کرنے والی اداکارہ بن گئی ہیں۔ ہالی ووڈ کا شمار دنیا کی سب سے بڑی فلم انڈسٹریوں میں ہوتاہے،جہاں فلموں کے بجٹ سے لے کر اداکاروں کے معاوضے تک اربوں روپے کی سرمایہ کاری کی جاتی ہے تاہم گزشتہ کئی عرصے سےبالی ووڈ بھی ہالی ووڈ کوٹکر دینے لگا ہے اور بالی ووڈ اداکار بھی دنیا میں سب سے زیادہ معاوضہ حاصل کرنے والے اداکاروں کی فہرست میں شامل ہونے لگے ہیں ،جس کی مثال بالی ووڈ کی ڈمپل گرل دپیکا پڈوکون ہیں جو گزشتہ سال فوربز میگزین کی فہرست میں ٹاپ ٹین میں شامل ہونے میں کامیاب ہوگئی تھیں لیکن اس بار دپیکا کی قسمت نے ان کا ساتھ نہیں دیا اور دسویں نمبر پر تو کیا دپیکا میگزین کی فہرست سے ہی آؤٹ ہوگئیں۔ اس خبرکوبھی پڑھیں: دپیکا پڈوکون ایک اور ہالی ووڈ فلم میں کاسٹ
Search
670327-shoaibakhtar-1480818591-934-640x480

بابر، کوہلی کا ہم پلہ قرار، شعیب اختر نے سوال اٹھا دیے

670327-shoaibakhtar-1480818591-934-640x480لاہور: بابر اعظم کو ویرات کوہلی کا ہم پلہ قرار دینے پر شعیب اختر نے سوال اٹھا دیے،سابق اسپیڈ اسٹار کا کہنا ہے کہ نوجوان بیٹسمین کی حوصلہ افزائی میں کوئی برائی نہیں لیکن توقعات کا بوجھ بڑھانا درست نہ ہوگا۔
تفصیلات کے مطابق قومی کرکٹ ٹیم کے ہیڈ کوچ مکی آرتھر کو بابر اعظم میں بھارتی سپر اسٹار ویرات کوہلی کی جھلک نظر آتی ہے،ایک انٹرویو میں انھوں نے کہا تھا کہ اس عمر میں نوجوان بیٹسمین بھارتی اسٹار کے ہم پلہ ہیں، یاد رہے کہ اس سے قبل انھوں نے اسد شفیق کوبھی تکنیکی طور پر سچن ٹنڈولکر جیسا بہتر بیٹسمین قرار دیا تھالیکن نیوزی لینڈ میں کارکردگی نے کمزوریاں آشکار کردیں۔
ہیملٹن ٹیسٹ میں وکٹوں کی جھڑی کے دوران بابر اعظم نے 90رنز کی اننگز کھیلی تو کوچ آسمان پر چڑھاتے نظر آئے، نوجوان بیٹسمین کے بارے میں ہیڈ کوچ کے حالیہ بیان پر اپنے ردعمل کا اظہار کرنے کیلیے شعیب اختر نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ کا سہارا لیا، انھوں نے سوال اٹھایا کہ کیا بابر اعظم واقعی ویرات کوہلی کے پائے کے بیٹسمین ہیں۔
پرستاروں سے رائے طلب کرنے کے بعد سابق اسپیڈ اسٹار نے دوسرے پیغام میں کہا کہ نوجوان بیٹسمین کی حوصلہ افزائی میں کوئی برائی نہیں لیکن ابھی سے توقعات کے بوجھ بڑھانا درست نہ ہوگا، ان کو نشوونما پانے اور نکھرنے کا موقع دیا جائے،ہوسکتا ہے کہ بابر اعظم آنے والے وقت میں ویرات کوہلی سے بھی بہتر ثابت ہوں لیکن ابھی انٹرنیشنل کرکٹ میں نووارد اور قدم جمانے میں مصروف نوجوان لڑکے کا بڑے اسٹارز کے ساتھ موازنہ درست نہیں، ان کو اس منزل تک پہنچنے کیلیے کئی سنگ میل عبور کرنا ہیں۔ دریں اثنا شائقین نے بھی موازنے کو قبل از وقت قرار دیا ہے۔




Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *