اہم ترین خبریں
لاس اینجلس: ہالی ووڈ فلم ’’لالہ لینڈ‘‘ سے دنیا بھر میں مقبولیت حاصل کرنے والی خوبرو اداکارہ ایما اسٹون رواں سال سب سےزیادہ کمائی کرنے والی اداکارہ بن گئی ہیں۔ ہالی ووڈ کا شمار دنیا کی سب سے بڑی فلم انڈسٹریوں میں ہوتاہے،جہاں فلموں کے بجٹ سے لے کر اداکاروں کے معاوضے تک اربوں روپے کی سرمایہ کاری کی جاتی ہے تاہم گزشتہ کئی عرصے سےبالی ووڈ بھی ہالی ووڈ کوٹکر دینے لگا ہے اور بالی ووڈ اداکار بھی دنیا میں سب سے زیادہ معاوضہ حاصل کرنے والے اداکاروں کی فہرست میں شامل ہونے لگے ہیں ،جس کی مثال بالی ووڈ کی ڈمپل گرل دپیکا پڈوکون ہیں جو گزشتہ سال فوربز میگزین کی فہرست میں ٹاپ ٹین میں شامل ہونے میں کامیاب ہوگئی تھیں لیکن اس بار دپیکا کی قسمت نے ان کا ساتھ نہیں دیا اور دسویں نمبر پر تو کیا دپیکا میگزین کی فہرست سے ہی آؤٹ ہوگئیں۔ اس خبرکوبھی پڑھیں: دپیکا پڈوکون ایک اور ہالی ووڈ فلم میں کاسٹ
Search
685736-match-1482242259-995-640x480

آسٹریلوی ٹیم جیت کربھی اپنے میڈیا کی نظر میں ولن

685736-match-1482242259-995-640x480میلبورن: آسٹریلوی ٹیم گابا ٹیسٹ جیت کر بھی اپنے میڈیا کی نظر میں ولن بن گئی کیوں کہ 39 رنز سے ناکامی کا شکار ہونے والے پاکستان کو فاتح کی طرح سراہا جا رہا ہے جب کہ میزبان کپتان اسٹیون اسمتھ کہتے ہیں کہ اگلے مقابلوں میں ہم زیادہ ’ظالم‘ ثابت ہوں گے۔
تفصیلات کے مطابق آسٹریلوی ٹیم باکسنگ ڈے ٹیسٹ کیلیے میلبورن کا رخ کررہی ہے، اگرچہ اس نے پاکستان کے خلاف پہلے ٹیسٹ میں کامیابی حاصل کی مگر محسوس ایسا ہوتا ہے کہ مقامی میڈیا کے پاس اس کیلیے کوئی ’کرسمس گفٹ‘ نہیں ہے، مضبوط ترین پوزیشن کے باوجود صرف 39 رنز کی کامیابی کے باعث کینگروز کو شدید تنقید کا نشانہ بنایا جارہا ہے۔
دوسری جانب پاکستان ٹیم کی بھرپور فائٹ نے اسے تاریخ کے بہترین ٹیسٹ مقابلوں میں شامل کردیا۔ فیئرفیکس میڈیا کیلیے لکھنے والے کرکٹ رائٹر میلکم ناکس نے کہا کہ آسٹریلوی ٹیم 0-1 کی برتری کے ساتھ میلبورن پہنچے گی مگر گابا میں جوانمردی کا مظاہرہ کرنے والی پاکستان ٹیم ہی فاتح دکھائی دے رہی ہے، پہلی اننگز میں 300 کے قریب برتری حاصل کرنے کے بعد میزبان کے ہاتھ صرف 39 رنز کی کامیابی کی بڑی وجہ میچ کے دوران کی جانے والی بھیانک غلطیاں ہیں۔
کپتان اسٹیون اسمتھ کی کامیابی کا مزہ پوری طرح کرکرا ہوچکا، انہوں نے کہاکہ محسوس ایسا ہوتا ہے کہ ہم نے اب بھی اپنا کام نہیں کیا، ہمیں سخت محنت کا سلسلہ جاری رکھنا ہوگا، اگر ہم حریف سائیڈ کو گرفت میں لینے کی پوزیشن میں آجائیں تو پھر اسے چھوڑنا نہیں چاہیے، ہم اگلے میچز میں مزید ظالم ثابت ہوں گے۔
یاد رہے کہ آسٹریلوی ٹیم گذشتہ کچھ عرصے سے ویسے بھی زیرعتاب ہے، اسے سری لنکا اور پھر جنوبی افریقہ کے ہاتھوں مسلسل 5 میچز میں ناکامی کا منہ دیکھنا پڑا، اگرچہ پروٹیز کے خلاف آخری ٹیسٹ جیت کر ٹیم نے اپنا کچھ اعتماد بحال کیا مگر اب برسبین میں کامیابی کے باوجود اسے مجرم گردانا جا رہا ہے۔




Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *