مقبوضہ کشمیر میں 3 شہادتوں کیخلاف مکمل ہڑتال، شر پسندوں نے مزید10خواتین کے بال کاٹ دیے

سری نگر: مقبوضہ کشمیر میں ضلع شوپیاں کے مختلف علاقوں میں بھارتی فورسز کے ہاتھوں شہید ہونے والے نوجوانوں کی نماز جنازہ میں ہزاروں لوگوں نے شرکت کی، جبکہ مقبوضہ کشمیر میں خواتین اور کم عمر لڑکیوں کی چٹیاں کاٹنے کے واقعات میں بتدریج اضافہ ہو رہا ہے۔
ضلع شوپیاں کے مختلف علاقوں میں بھارتی فورسز کے ہاتھوں شہید ہونے والے نوجوانوں کی نماز جنازہ میں ہزاروں لوگوں نے شرکت کی، شہید ہونیوالے نوجوانوں کو جن کی شناخت زاہد میر، آصف احمد اور عرفان اللہ کے طورپر ہوئی ہے، بھارتی فوجیوں نے ضلع کے علاقے کیلر میں محاصرے اور تلاشی کی ایک کارروائی کے دوران شہید کیا تھا، لوگوں کی بڑی تعداد کی وجہ سے نوجوانوں کی نماز جنازہ کئی بار ادا کی گئی۔
نوجوانوں کو گنائی پورہ، کتھ کلان اور ہیف کے علاقوں میں بھارت کے خلاف اور آزادی کے حق میں نعروں کی گونج میں سپرد خاک کیا گیا، نوجوانوں کی شہادت پر ضلع شوپیان میں مکمل ہڑتال کی گئی، جبکہ مقبوضہ کشمیر میں خواتین اور کم عمر لڑکیوں کی چٹیاں کاٹنے کے واقعات میں بتدریج اضافہ ہو رہا ہے، سرینگر، گاندربل، بارہمولہ، بڈگام اضلاع اور دیگر علاقوں میں مزید10واقعات پیش آئے ہیں، چھانہ پورہ میں دن دیہاڑ ے 5 سالہ لڑکی کی چوٹی کاٹ دی گئی، ضلع گاندربل میں خواتین کی چٹیاں کاٹنے کے 2 تازہ واقعات پیش آئے، نارائن باغ میں ایک گھر میں نقاب پوش نے لڑکی کو بیہوش کر کے اس کی چٹیا کاٹ دی، چک ربہ تار میں بھی14 سالہ لڑکی پر کمیکل کا چھڑکاؤ کیا اور اس کے بال کاٹ کر فرار ہوگیا۔




Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *